4

سب کچھ امیت شاہ کے کہنے پرہوا،متاثرہ علاقوں میں ڈوبھال سے وزیرداخلہ کی شکایت

نئی دہلی: 26فروری(بی این ایس )
راجدھانی دہلی میں تشدد کی وجہ سے ماحول کشیدہ بنا ہواہے۔ جس کے بعد قومی سلامتی کے مشیراجیت ڈوبھال نے تشددسے متاثرہ علاقوں کا دورہ کیاَ اس دوران ڈوبھال نے مقامی لوگوں سے بات چیت بھی کی لیکن ایک موقع ایسا بھی آیا جب ایک شخص وزیر داخلہ امت شاہ کی شکایت کرنے لگا۔اجیت ڈوبھال کے تشدد سے متاثرہ علاقوں میں دورے کے دوران لوگوں نے وزیر داخلہ امت شاہ اور بی جے پی پر سوال اٹھانے شروع کر دیے۔ اپنے دورے پر اجیت ڈوبھال گھونڈہ بھی پہنچے۔متاثرہ علاقوں میں مقامی لوگوں سے ملاقات کے دوران اجیت ڈوبھال کو ایک شخص نے کہاہے کہ یہ سب امت شاہ اوربی جے پی کے کہنے پر ہو رہا ہے۔بھیڑ میں موجود شخص نے اجیت ڈوبھال سے کہا کہ یہاں آر ایس ایس کی دہشت گردی بڑھ رہی ہے۔ ہم نے کبھی کسی پر ظلم نہیں کیا لیکن ہمارے ساتھ غلط ہورہاہے۔ انہوں نے کہاہے کہ یہ سب آر ایس ایس،امت شاہ اور بی جے پی کے کہنے پر ہو رہاہے۔ اس کے بعد وہاں پر بی جے پی اور امت شاہ کے خلاف نعرے بازی بھی ہوئی۔ ساتھ ساتھ لوگوں نے ہندوستان زندہ باد اور بھارت ماتا کی جے کے نعرے بھی لگائے۔وہیں ایک طالبہ نے اجیت ڈوبھال سے بات کرتے ہوئے کہاہے کہ وہ تشدد کی وجہ سے پڑھنے نہیں جا پا رہی ہے۔ ہمارے بھائی ہماری حفاظت کر رہے ہیں۔ہمارے لوگوں کی دکانیں جلا دی گئی ہیں۔ ہم محفوظ نہیں ہیں جس پر اجیت ڈوبھال نے جواب دیا کہ آپ لوگوں کوفکرکرنے کی ضرورت نہیں ہے۔ آپ کو یقین دلاتا ہوں کہ آپ کی حفاظت حکومت اور پولیس کی ذمہ داری ہے۔مقامی لوگوں سے ملاقات کے دوران اجیت ڈوبھال نے کہاہے کہ پولیس تعینات ہے اور پوری مستعدی کے ساتھ اپنا کام کررہی ہے۔ وزیر اعظم نریندر مودی اور وزیر داخلہ امت شاہ نے امن کی بحالی کی ہدایت دی ہے۔ تمام لوگوں کو مل کر کام کرناہے۔ علاقے میں سب لوگ امن کی بات کر رہے ہیں۔





Source link

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں