عیدالفطرکادن مسلم ایکتااوراخوت وسالمیت کی مثال پیش کرتاہے: توقیراحمدعرف منا


جالے: 23؍مئی(رفیع ساگر؍بی این ایس)عید الفطر نہ صرف مسلمانوں کیلئے ایک اہم تہوار ہے بلکہ جمہوری ہندوستان میں اس کا ایک اہم مقام ہے کیونکہ یہ دن ہندو – مسلم ایکتا ، گنگاجمنی تہذیب ، اخوت و سالمیت کی مثال پیش کرتا ہے۔ مذکورہ باتیں مقامی بلاک کے جالے جنوبی پنچایت کے لتراہا باشندہ و سماجی کارکن توقیر احمد عرف منا نے ہفتہ کو جاری ایک پریس ریلیز میں کہیں۔ انہوں نے موذی وائرس کورونا کو لیکر جاری لاک ڈاؤن کے درمیان منائے جانے والے عید الفطر جیسے عظیم تہوار کے پس منظر میں کہا کہ ہرسال جہاں ہم لوگ شدومد کے ساتھ عید مناتے تھے اور اس دن ایک دوسرے کو نہ صرف مبارکباد پیش کرتے تھے بلکہ باہمی رنجش کو بھلاکر گلے ملتے تھے اس دوران دو دلوں میں موجود بغض و کینہ کا ہمیشہ کیلئے خاتمہ ہوجاتا تھا مگر افسوس ہیکہ کورونا نے ہمیں ایک دوسرے سے جسمانی فاصلے بنانے کیلئے مجبور کردیا ہے لیکن اس عید کے موقع پر ہمیں اس بات کا ضرور خیال رکھنا ہوگا کہ گلے نہیں مل کر بھی اپنے جذبات و احساسات سے سرشار ہوکر آپسی الفت و محبت کو پہلے کے جیسے ہی برقرار رکھنا ہوگا ۔ انہوں نے مزید کہا کہ امسال عید سعید کو سادگی و احترام کے ساتھ مناتے ہوئے اپنے گھروں میں ہی نماز عید کا اہتمام کریں اور جہاں تک ممکن ہوسکے آس پڑوس کا خاص خیال رکھیں کیونکہ امسال لاک ڈاؤن اور کام کاج بند ہونے کے سبب معاشرہ میں بعض ایسے بھی افراد ہیں جو کہ ہماری معاونت کا محتاج ہے لیکن غیرت و ندامت اور سماجی طعنہ و تشنیع کی وجہ کر منہ نہیں کھول پا رہے ہیں اسلئے ہمیں ایسے مستحقین افراد کی شناخت کر در پردہ اسکی مدد کرنی چاہئے تاکہ اس کے گھر تک بھی خوشیاں پہونچ سکے ۔ مسٹر توقیر احمد نے کہا کہ کورونا سے ہمیں خوفزدہ ہونے کی ضرورت نہیں ہیں بلکہ احتیاطی تدابیر کو اپناتے ہوئے مقابلہ کر ان کے ساتھ جینے کا ہنر سیکھنا ہے علاوہ ازیں انہوں نے کہا کہ سماجی فاصلے اور حکومتی گائڈلائین پر عمل درآمد ہوکر ہی مہلک وبا کورونا کو ہم سبھی شکست دے سکتے ہیں۔





Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *