9 ایکڑ قیمتی اراضی کی بندر بانٹ پر سول ایوی ایشن کے 3 افسران گرفتار


نامزد ملزمان میں اس وقت کے کمشنرز و ڈپٹی کمشنرز سمیت 32 افسران و دیگر شامل ہیں، ایف آئی اے (فوٹو : فائل)

نامزد ملزمان میں اس وقت کے کمشنرز و ڈپٹی کمشنرز سمیت 32 افسران و دیگر شامل ہیں، ایف آئی اے (فوٹو : فائل)

 کراچی: سول ایوی ایشن اتھارٹی کی 9 ایکڑ قیمتی اراضی کی بندر بانٹ کے کیس میں ایف آئی اے نے سی اے اے کے تین افسران اور ایک ملزم کو گرفتار کرلیا۔

ذرائع کے مطابق سول ایوی ایشن اتھارٹی کی بیش قیمت 9 ایکڑ اراضی میں بدعنوانی کے الزام میں ایف آئی کارپوریٹ کرائم سرکل نے دو مقدمات درج کرکے 4 ملزمان کو گرفتارکرلیا۔

گرفتار ملزمان میں سول ایوی ایشن اتھارٹی کے تین افسران اور ایک پرائیوٹ فرد بھی شامل ہے۔ ذرائع کے مطابق گرفتار افسران میں زریں گل درانی، محمد یونس درانی، سید محمد کلیم اور نجی شہری مشتاق شامل ہیں۔

ایف آئی اے حکام کی جانب سے درج دو مقدمات میں مجموعی طور پر 32 ملزمان کو شامل کیا گیا ہے۔ نامزد ملزمان میں سیکریٹری لینڈ یوٹیلائزیشن ڈیپارٹمنٹ ثاقب سومرو، اس وقت کے اسسٹنٹ کمشنر، ڈپٹی کمشنر محمد علی شاہ، قاضی جان محمد، اس وقت کے اسسٹنٹ کمشنرز، ڈپٹی کمشنر، کمشنرز مختیارکار، تپے دار، سپر وائزر اور دیگر ملزمان میں رجسٹرار، سی اے اے اسٹیٹ ڈیپارٹمنٹ کے افسران و دیگر پرائیوٹ افراد بھی شامل ہیں۔

نامزد ملزمان میں سی اے اے اراضی پر حال ہی میں مبینہ قبضہ کرنے میں ملوث ارسلان نامی شخص کو بھی شامل کیا گیا ہے۔ ایف آئی اے چھاپہ مار ٹیم نے اس وقت کے اے سی، ڈی سی محمد علی شاہ کے گھر پرچھاپہ مارا تاہم سید محمد علی شاہ چھاپے کی مبینہ اطلاع ملنے پر گھر پر دستیاب نہیں ہوئے۔

نامزد ملزمان کی گرفتاری کے لیے ایف آئی اے کے مختلف سرکل کے اہل کاروں پر مشتمل ٹیم تشکیل دے دی گئی ہے۔





Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *